Ishq Na Puchy Zat by Arshad Abrar Arsh

The Beam Magazine presents a novelette ‘Ishq Na Puchy Zat’ by Arshad Abrar Arsh. A heart touching story by the versatile writer. A saga of eternal love.

محمد ارشد ابرار ارش ۔۔۔۔ 

سکونت۔۔۔ اسلام آباد

جائے پیدائش ۔۔۔ کوتانی، تحصیل تونسہ شریف

ادب سے بہت محبت ہے۔  قریب دو سال سے لکھ رہا ہوں ۔ لکھنے کے علاوہ پڑھتا ہوں 

اور لکھنے کے علاوہ کچھ بھی نہیں کرتا ۔ 

بی ایس کمپیوٹر سائنس کر رہا ہوں ۔ 

ان دو سال میں تین ناول اور بارہ افسانے لکھے ہیں 

عشقا وے ۔۔۔ ناول

تیرے سنگ یارا ۔۔۔۔ ناول

عشق نا پچھے ذات ۔۔۔ ناولٹ 

۔آبی قتل ، سچے جھوٹے رشتے ، پیر صاحب ، سزا ، مسیحا ، دو خط ، چراغ ، چھٹی حس ، قرض ، چہرے اور قصہ ایک رات کا 

یہ سب افسانے ہیں 

جبکہ ” دل جزیرہ ” ناول زیر قلم ہے 

Pdf Download Link: Isha Na Puchy Zat by Arshad Abrar Arsh.

Or To continue reading online, click on the Next button below.

Ishq na puchy zat

To read more Urdu novels available on The Beam Magazine, CLICK HERE.

© 2018 The Beam Magazine (www.mybeammag.com)

Digiprove sealCopyright protected by Digiprove © 2018

11
Leave a Reply

avatar
6 Comment threads
5 Thread replies
0 Followers
 
Most reacted comment
Hottest comment thread
5 Comment authors
Arshad Abrar ArshMuhammad MazharRaheelaSarabuttIrfan Ahmed Recent comment authors

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.

  Subscribe  
newest oldest most voted
Notify of
Arshad Abrar Arsh
Guest
Arshad Abrar Arsh

بہت شکریہ بیم انتظامیہ ۔۔۔۔
آپ نے میرے لفظوں کو معتبر جانا اور اپنے میگزین کا حصہ بنایا ۔۔۔
کامیابی و کامرانی کی ڈھیروں دعائیں

Irfan Ahmed
Guest

Arshad, aap ka novel padha main ne, formatting ke douraan.
Kehna padhega ke bahut hi khoobsurat likha hai aap ne. Ek dum dil ko choo gayi kahani.

Arshad Abrar Arsh
Guest
Arshad Abrar Arsh

آپ کا حسنِ نظر ہے سر ۔۔۔
محنت اپنا رنگ ضرور لاتی ہے اس ناول کو بہت محبت سے لکھا ہے میں نے ۔۔۔
آپ کے الفاظ میرے لیئے سند ہیں
صد بار شکریہ

Sarabutt
Guest
Sarabutt

Ap k alfaaz insan ko haqeqi dunia se kahen bahot door le jatay hen insan us dunia k ho k rah jana chahata hay. Bahot kamal k topic hay haan thora reality se door hay asal main asa kam ei hota hay but koshish achi hay. Ak do jahaga thora alfaaz k johl tha maslan pink pakgri or ak fo jaga or baqi acha hay.

Arshad Abrar Arsh
Guest
Arshad Abrar Arsh

سارہ بٹ جی
بے حد شکریہ آپ کا کہ آپ نے اس قدر توجہ سے میرا ناول پڑھا ہے ۔۔۔
تعریف و توصیف اور پسندیدگی کیلئے بے حد شکر گزار ہوں ۔۔۔۔
سلآمت رہیں ہمیشہ آمین

Raheela
Guest

Nice noval by arshad abrar arsh very good best of luck hmesha esy hi acha acha lekho or khon nam kamou

Arshad Abrar Arsh
Guest
Arshad Abrar Arsh

بہت شکریہ راحیلہ ۔۔۔
سلامت رہیں
صحت و مسرت کی ڈھیروں دعائیں

Muhammad Mazhar
Guest
Muhammad Mazhar

Aishad bhai
Ap future k auchy likhari ho.Last 10 years men agr mujhy koi noval passand aya hy to wo apka naval hay
Tery sang yara

Arshad Abrar Arsh
Guest
Arshad Abrar Arsh

آپ کا حسنِ ذوق ہے پیارے بھائی

Muhammad Mazhar
Guest
Muhammad Mazhar

Ab Ishq na puchy zatt uf itna aucha.Kamal hi kar dia

Arshad Abrar Arsh
Guest
Arshad Abrar Arsh

پسندیدگی کیلئے بے حد مشکور ہوں