A Tribute to Sana Hussain

سمجھ میں نہیں آتا ۔۔۔ بات شروع کہاں سے کروں ۔۔۔ اور اختتام کیا ہوگا ۔۔۔
دوست کیا ہوتا ہے ۔۔۔ یہ وہی سمجھ سکتا ہے ۔۔۔ جس کو یہ رشتہ نصیب ہوا ہو ۔۔۔ مجھے ملا ہے ۔۔۔ ہر دوست بہت ہی بلند ملا ہے ۔۔۔ انہی میں سے ایک وہ تھی ۔۔۔ جسکو آپ سب ثنا حُسین کے نام سے یاد کر رہے ہیں ۔۔۔ اس کا اصل نام مدیحہ تھا ۔۔۔ مدیحہ حُسین ۔۔۔
محبتوں کے معاملے میں بڑی خوش نصیب ہوں ۔۔۔ پر جیسی محبت مدیحہ سے ملی ہے ۔۔ اسکی مثال میرے پاس کوئی نہیں ہے ۔۔۔ کیا کبھی کوئی آپ کو یہ کہتا ہے ۔۔؟ ۔۔۔ کہ اگر تم نے لکھنا چھوڑ دیا نا ۔۔۔ تو میں نے مر جانا ہے ۔۔۔ آپ کی کہانیاں پڑھ کر میں اپنی بیماری بھول جاتی ہوں ۔۔۔
کئی دفعہ ایسا ہوا کہ میں نے اسکو ٹوکا ۔۔۔ بہت زیادہ محنت کرتی تھی ۔۔۔ نہ جانے کتنے پیجیز کے لیے ایڈیٹنگ بنا رہی ہے ۔۔ ہر کسی کی مدد کو تیار ۔۔۔ میں ڈانٹ بھی دیتی تھی کہ مجھے بالکل اچھا نہیں لگتا ہے کہ تم خود کو یوں ہلکان کرو ۔۔۔ اپنی صحت کا خیال کیا کرو ۔۔۔ کبھی آرام بھی کر لیا کرو ۔۔۔ آگے سے اُس نے کہنا ۔۔۔ آپی یہ کام مجھے مصروف رکھتے ہیں ۔۔۔ اگر فارغ بیٹھوں تو ایک دن نہ گزرے ۔۔۔
بے لوث بے غرض لڑکی ۔۔۔ ہم سب کو کچھ نہ کچھ دیکر ہی گئی ہے ۔۔۔
میں بڑی حیران ہوا کرتی تھی ۔۔ کہ بھلا کوئی یوں اندھی محبت بھی کرتا ہے ۔۔۔ جیسی وہ مجھ سے کرتی تھی ۔۔ میری کامیابی پہ خون اُسکا بڑھتا تھا ۔۔۔ اُس نے کہنا آپی میں چاہتی ہوں ۔۔ اللہ آپ کو بہت ترقی دے ۔۔۔ آپکا ہر ناول کتابی شکل میں آئے ۔۔۔ میں ہمیشہ اس کی محبت کی قرض دار رہوں گی ۔۔۔ اس دفعہ ناول کو بریک لگائی تھی ۔۔ اُس نے کہا میں نے سارے پرانے ناول پھر سے دو دو مرتبہ پڑھ لیے ہیں ۔۔ اب تو اگلا دے دو ۔۔۔ کچھ تو میرا خیال کرو ۔۔۔ میرے حال پہ رحم کھاؤ ۔۔ اور نہ جانے کیاکیا ۔۔۔ اللہ کی قسم اگر مجھے خبر ہوتی نا ثنا کہ تم نے یوں بے وفائی کرنی ہے ۔۔۔ میں ڈیسکس کئے سارے پراجکٹ مکمل کردیتی ۔۔۔
اب صبح کے تین بجے کس کو میسج کروں گی ۔۔ کہ یہ لکھا ہے ۔۔۔ پڑھ کے دیکھو ٹھیک ہے ۔۔۔ اور صبح اُٹھ کر آن لائن آنے پہ خبر ہو کہ ایڈیٹ ہوکر پوسٹ بھی ہوگیا ۔۔۔ اب ایسا کبھی نہیں ہوا کرے گا ۔۔۔ ثنا تم نے اچھا نہیں کیا میرے ساتھ ۔۔۔
میرے لیے اس دنیا میں ایک ہی ثنا تھی ۔۔ میری عادت تھی ۔۔۔ جب بھی کوئی نیا خیال آنا ۔۔ یا کام کے حوالے سے کوئی بات کرنی ہوتی تو میں اسکو ان باکس میں یوں آواز دیتی تھی ۔۔۔
ثانی ۔۔۔
ثانا ۔۔۔
ثانو ۔۔۔
سُن لے ۔۔۔
آجا ۔۔۔
جلدی کر ۔۔۔
اب بھی اسکا ان باکس کھول کر کئی دفعہ بند کیا ہے ۔۔۔ کیا ممکن ہے کہ میں اسکو اب بھی آواز دوں تو کیا وہ مجھے جواب دے گی ۔۔۔؟ ۔۔۔
وہ میری بڑی عزت کرتی تھی ۔۔۔ کبھی ہو ہی نہیں سکتا کہ میں اسکو میسج کروں ۔۔۔۔ اور جواب نہ آیا ہو ۔۔۔ پر اب کیا کروں ۔۔۔ میں جتنی مرضی آوازیں دوں ۔۔۔ جتنا مرضی لاڈ کروں اُس نے نہیں جواب دینا ۔۔۔ روٹھ گئی ہے ۔۔۔ چلی گئی ہے ۔۔۔
کاش ممکن ہوتا نا تو میں اسکو اپنا دل دے دیتی ۔۔۔
کئی دفعہ اس نے کہانی کی بات کرنی میں نے کہنا ساری بتا دیتی ہوں ۔۔۔ لکھ تم لوگ خود لو ۔۔۔ تو اس نے کہنا میرے پاس آپ کا دماغ ہوتا تو میں دن رات لکھتی ۔۔۔
کبھی کہنا ۔۔۔بچوں کو میرے پاس لے آؤ۔۔۔میں سب دیکھ لوں گی ۔۔۔آپ بس ایک کمرےمیں بند ہوکر لکھو۔۔۔۔

پوری سوشل میڈیا بھرا پڑا ہے ۔۔۔ کہیں کوئی ہے ایسا جو میری ثنا جیسی ایڈیٹنگ کرتا ہو ۔۔۔؟ ۔۔۔ نہیں نا ۔۔۔ اس کے جیسا ہُنر کسی کے پاس نہیں ہے ۔۔۔ کئی لڑکیوں کو اُس نے ایڈمن بنایا ۔۔ سارا کام سیکھایا ۔۔ میں اسکے فیصلے میں نہیں بولتی تھی ۔۔۔ پر بعد میں جب اُس نے غصے میں آنا ۔۔۔آپی ہٹا دی میں نے وہ ایڈمن ۔۔۔ ادھر پوسٹ کرتی نہیں تھی ۔۔۔ اور کئی اور جگہ اتنی مصروف ہے ۔۔۔ تب میں نے کہنا کہ پیج تمہارا ہے ۔۔۔ اور ساری محنت بھی تمہاری ہی ہے ۔۔۔ کوئی اور تمہارے معیار کا کہاں ۔۔۔ پھر اُس نے کہنا ۔۔اب کسی کو ایڈمن نہیں بناؤں گی ۔۔۔ ہر کوئی اپنی غرض لیکر آتا ہے ۔۔۔
خیر یہ تو ہمارے پاس اسکی یادیں رہ گئی ہیں ۔۔۔ اور وہ شہزادی اپنے دیس سدھار گئی ۔۔۔
مجھے اپنے اللہ کی ذات پہ پورا یقین ہے ۔۔۔جو خوشیاں ہماری پیاری کو اس دنیا میں نہیں ملی ہیں ۔۔۔ وہاں ملیں گی ۔۔۔ اسکی شادی ہوگی ۔۔۔ پیارے پیارے بچے ہوں گے ۔۔۔
ایمن صالحہ ۔۔۔ عاشی ۔۔ ہادیہ نور ۔۔۔ وردہ ۔۔۔ مدیحہ مرحومہ اور میں ۔۔۔ ہم لوگ ایک دوسرے کے بہت قریب تھے ۔۔۔ ایمن ۔۔ عاشی ۔۔ وردہ اور ہادی ۔۔۔ ان سب کی کل سے رو رو کر حالت خراب ہے ۔۔۔ کسی کو چین نہیں آرہا ۔۔۔ ہم میں سے کوئی بھی اسکو نہیں بھول سکتا ۔۔ ہم لوگ ایک دوسرے کی وہ بہنیں ہیں ۔۔۔ جو ایک ماں کی کوکھ سے پیدا نہیں ہوئی ہیں ۔۔ پر سگھی بہنوں سے بڑھ کر آپس میں پیار ہے ۔۔ آج ہماری ایک بہن ہمیں چھوڑ گئی ۔۔۔ درد کا ایک پہاڑ ہے ۔۔ جو دل میں گھر کر گیا ہے ۔۔۔ ہم لوگ اسکو اپنی ماں بولا کرتے تھے ۔۔ کیونکہ ایک وہی تھی جو ہم سب پہ رُعب ڈال لیا کرتی تھی ۔۔۔ چیٹ کرتے کرتے باتیں نہ جانے کہاں سے کہاں نکل جاتیں ۔۔۔ اُس نے آکر کوئی ایسی بات کر دینی کہ ایمن اور ہادی نے کہنا ۔۔۔لو آگئی جے ساڈی ماں ۔۔۔ ہُن لیکچر شروع کردے ماں ۔۔۔
اور وہ شہزادہ جس میں مدیحہ کی جان تھی ۔۔۔ عدنان ۔۔۔ مدیحہ کا چھوٹا بھائی ۔۔۔ اس پہ کیا بیت رہی ہے ۔۔۔ یہ وہ جانتا ہے ۔۔۔ یا اللہ پاک کی ذات ۔۔۔
ایک مسلمان ہونے کی حیثیت سے یہ ہمارا عقیدہ و ایمان ہے ۔ ۔۔ جو ہوتا ہے ۔۔۔ اللہ کے حکم و عزن سے ہوتا ہے ۔۔۔ ہماری کوئی اوقات و حیثیت نہیں ہے ۔۔ کہ ہم اللہ کی رضا سے انخراف کریں ۔۔۔ وہ مالک ہے ۔۔۔ پیدا کرنے والا ہے ۔۔ پالنے والا ہے ۔۔۔ وہ مدیحہ سے ستر ماؤں سے زیادہ پیار کرتا ہے ۔۔۔ ہماری محبت کی تو اسکی شان کے سامنے کیا اوقات ۔۔۔ کہ ہم سوال اٹھائیں ۔۔۔
ہم تو التجا ہی کر سکتے ہیں کہ یا اللہ تو اپنے پیارے حبیب محمد ﷺ کا صدقہ کرکے ۔۔۔ ہماری بہن کے تمام ضغیرہ و کبیرہ گناہ معاف فرما ۔۔۔اسکی قبر کو جنت کا ایک باغ بنا دے ۔۔۔ اسکے تمام امتحانوں میں آسانی عطا فرما ۔۔۔ مولا ۔۔۔ تیری وہ بندی بڑی صابر اور شُکر گُزار بندی تھی ۔۔۔ مولا اتنی تکلیف سہنے پر بھی کبھی اسکے لبوں سے شکوہ نہیں نکلا ۔۔۔۔ یا اللہ بی بی فاطمہ ؓ کی چادرِ پاک کا صدقہ میری ثنا کے درجات بلند ہوں ۔۔۔ مولا اسکا نام اپنے ان بندوں میں شامل فرما جن سے تو راضی ہے ۔۔۔ مولا ۔۔ آج سیکنڑوں ہاتھ ہماری اس بہن کی مغفرت کے لیے بلند ہیں ۔۔۔ مولا ۔۔۔ تو ہماری دعا قبول فرما ۔۔۔ مالک ہماری امید بھی تو ہماری آس بھی تُو ۔۔۔ مالک ہمیں مایوس مت کرنا ۔۔۔ ہم بڑے گناہگار خاکی خاکسار ۔۔۔ اور تو بلند شان والا ۔۔۔ درگُزر کرنے والا ۔۔ سُننے والا ۔۔۔ نوازنے والا ۔۔۔ بخشنے والا ۔۔۔
یا اللہ ہمارے دلوں کو صبر عطا ہو ۔۔۔۔۔۔ آمین ۔۔۔

#نیلم-ریاست

 

It is with a very heavy heart, and with the utmost grief that we announce that one of our beloved team members, Sana Hussain, has expired on the 25th of January, 2019. She is no more. Sana was suffering from asthma, and was in the hospital since the past few days. She was on the road to recovery, but her heart failed her, and she passed away.

The Beam Magazine was as much Sana’s website as it was anyone else’s. At the time of the website’s inception, when nobody knew us, it was Sana who convinced authors to send their work to us. She was our graphics editor. All the photos that you saw on our website, all the sneak peeks, all the cover images, were prepared by her. Her graphics were beyond excellent, and she was probably the best in the field. Not only us, but she provided graphics for a number of other authors as well as groups. She was also the admin for a number of author websites. She was a very simple girl by heart, and just wouldn’t say no to anyone.

Her loss is an irreparable damage, especially for us at The Beam Magazine. Even though we are separated by countries and continents, we had a very close bond among all our members. Her passing away leaves us with a very heavy heart. All are members are in tears, and are inconsolable.

Sana’s parents had already passed away. She leaves behind her younger brother. We pray to Allah to provide him the emotional strength to tide over this moment of grief.

People say that the show must go on. Right now, we are not sure how. As such, we are suspending all Magazine related activities for the time being.

May Sana’s soul rest in peace. She has gone, but she will never be forgotten. She will remain in our hearts forever. Thank you, Sana, for touching our lives. We are sorry, that we couldn’t do anything for you, when there was still time.

Irfan Ahmed

10
Leave a Reply

avatar
10 Comment threads
0 Thread replies
1 Followers
 
Most reacted comment
Hottest comment thread
9 Comment authors
Khansaawaheed sultanSABEENIqraRahma fazal Recent comment authors

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.

  Subscribe  
newest oldest most voted
Notify of
Aymen saleha
Guest

Bolny k liye lafz nahi hain,,, jo kho diya hai uski kami kbhi koi puri nahi kr skta,,, 1 khla hai jo hamesha rehy ha jisy koi bhi purr nai kr skta😢😢😢 1 bht achi dost,, behan,, dukh sukh ki sathi hmari maa hmari sana 😭😭😭😭😭😭😭

zaniab Ailya
Guest

Gaaye dinu ka suragh ly kar kidr sy aya kidr gaya wo Ajeeb manoos ajnabi tha mujhy to herain kr gaya wo main bhi herain hoon k aaj ki khud gaarz duniya mian in jesy log aaj bhi majood hain. main in k naam k siwa kuch bhi nahi janti jo bhi maloom huwa neelam aapa ki aur aap sb ki mohabaat sy…esy log bohat hi kaam hoty hain mgr na janay q jald hi sath choor jaty hain aur apny piyaru ko apni yaadun ki sogaat dy jaty hain. Ay mery wahdo la shareek ….meri altja hai ky Sana… Read more »

Matia Jahan
Guest
Matia Jahan

کیا کہوں کچھ سمجھ نہیں آ رہا مُجھے دل اُداس ہے جبکہ میں کون ہوں جسکی اُن سے دو چار بار بار ہوئی وہ جو انکے قریب تھے ،اپنے تھے اُنکو جانتے تھے اُن پر کیا گزر رہی ہوگی بس یہی دعا ہے کہ خُدا ہم سابکو صبر اور اُنکو جنت میں اعلیٰ مقام دے آمین۔

Anam
Guest
Anam

بچھڑا کچھ ادا
سے کہ رت ہی بدل گئی
اک شخص سارے
شہر کو ویران کرگیا

Sana sari zindagi sb ke diloon me abaad rhe gi
Yaqeen nhi ata itni km umar me chor gai
Bhot achi dost thi
Kuch bhi puchoo foran batati thi
Kisi cheez ka mana nhi kiya kbhi
Har kisi ki help krti thi foran
Kal se ye sun ke sana ab hm me nhi dil bhot udaas hai 🙁
ALLAH Sana ko Jannat me Aala muqam ata farmae

Rahma fazal
Guest
Rahma fazal

Allah paak Sana ko wahan ki baaharein dikhaen or unki maghfirat kare.. Aameen

Rahma fazal
Guest
Rahma fazal

Allah paak marhooma ki maghfirat kare aur unko wahan ki baharein dikhae.. Aameen

Iqra
Guest
Iqra

Ameen Allah unko janat mai Ala makam dein😢😢😢😔😭😭😭😭😭😭Mainy unko kae jagaho py dekha unka name sana hussain tha to mai jb b dekhti id zaror kholti muje lgta k wo meri frnd hy uska name b yhi tha mainy apni frnd ko b bola k ye tmhari id hy muje lgta hy pr wo khti nhi meri fb id nhi hy but i dont know. Why wo humesha attrack krti thin bs Allah unko Alla makam dein janat mai😊😊

SABEEN
Guest

zabardast

waheed sultan
Guest
waheed sultan

Ameen

Khansaa
Guest
Khansaa

اللہ پاک انکے درجات بلند فرمائے ۔آمین
میرا ان سے کوئی براہ راست رابطہ نہیں رہا۔لیکن میں نہیں اپنی دوست رائحہ مریم کی زبان سے اکثر و بیشتر ان کے متعلق اچھی گفتگو سنی ہے۔